image
Monday, Nov 18 2019 | Time 19:42 Hrs(IST)
  • ہندوستان کی ہاکی ٹیم بھونیشور میں پرو لیگ -2020 کےگھریلو میچ کھیلی گی
  • گوتابايا نے سری لنکا کے صدارتی عہدے کا حلف لیا
  • آلودگی روکنے میں ناکام رہے تو افسر اپنی جیب سے جرمانہ ادا کریں گے
  • ہندوستان۔پاکستان ایمرجنگ ایشیا کپ کے سیمی فائنل میں آمنے سامنے
  • فضائیہ نے ہمیشہ ملک کا وقار بڑھایا :گورنر
  • ایئرانڈیا کی ممبئی ۔نیروبی پروازآئندہ ہفتہ سے
  • ۔۔۔۔
  • کسانوں پر لاٹھی چارج کافی مایوس کن: اکھلیش
  • اڈیشہ پر شاندار جیت سے دہلی سپر لیگ میں
  • نیپال کسی کو اپنی ایک انچ زمین نہیں لینے دے گا:اولی
  • لوک پال نے رجت شرما کا استعفیٰ نامنظور کیا
Parliament

لوک سبھا میں چھٹے دن بھی کوئی کام کاج نہیں ہوسکا

لوک سبھا میں چھٹے دن بھی کوئی کام کاج نہیں ہوسکا

نئی دہلی،12مارچ (یو این آئی) کانگرس سمیت مختلف اپوزیشن جماعتوں اور حکمراں قومی جمہوری اتحاد (این ڈی اے) کی اتحادی پارٹی کے الگ الگ امور پر زبردست ہنگامہ کی وجہ سے لوک سبھا میں آج مسلسل چھٹے دن کوئی کام کاج نہیں ہوسکا اور کارروائی پورے دن کے لئے ملتوی کرنی پڑی۔

ایک بار ملتوی کئے جانے کے بعد ایوان کی کارروائی 12بجے جیسے ہی پھر سے شروع ہوئی تو مختلف جماعتوں کے اراکین ہاتھوں میں بینر اور تختیاں لیکر نعرے بازی کرتے ہوئے اسپیکر کی کرسی کے نزدیک پہنچ گئے۔

محترمہ مہاجن نے زبردست ہنگامہ اور نعرے بازی کے درمیان ضروری دستاویز ایوان کی میز پر رکھوائے۔

خاص خبریں

تمام جماعتیں نیشنلسٹ کانگریس اور بیجو جنتادل سے سیکھ لیں: مودی

نئی دہلی، 18نومبر (یو این آئی) وزیراعظم نریندر مودی نے ایوان میں بحث کے دوران اسپیکر کی کرسی کے نزدیک جاکر ہنگامہ کرنے کی کچھ جماعتوں اور ان کے لیڈروں کی فطرت کو نشانہ بناتے ہوئے آج نیشنلسٹ کانگریس پارٹی اور بیجو جنتادل کے اراکین کی کرسی کے نزدیک نہیں جانے کے’عہد‘ کی تعریف کرتے ہوئے کہاکہ حکمراں فریق سمیت تمام جماعتوں کو ان سے سیکھ لینی چاہئے مسٹر مودی نے راجیہ سبھا کے 250ویں اجلاس کے موقع پر آج ایوان میں خصوصی بحث ’ہندستانی حکمراں نظام میں راجیہ سبھا کے رول اور اصلاحات کی ضرورت‘ میں مداخلت کرتے ہوئے کہاکہ ایوان مختلف اہم موضوعات پر بحث کا پلیٹ فارم ہے اور اراکین کو بحث میں رکاوٹ کے بجائے بات چیت کا راستہ منتخب کرنا چاہئے۔

...مزید دیکھیں
جموں و کشمیر کے حالات اورعبداللہ کی حراست پر لوک سبھا میں ہنگامہ

جموں و کشمیر کے حالات اورعبداللہ کی حراست پر لوک سبھا میں ہنگامہ

نئی دہلی،18نومبر(یواین آئی)اپوزیشن نے جموں و کشمیر میں نیشنل کانفرنس کے لیڈر فاروق عبداللہ کی گرفتاری کے سلسلے میں وزیر داخلہ سے بیان دینے اور لوک سبھا اسپیکر سے اپنے اختیارات کا استعمال کرکے ایوان میں انہیں بلوانے کی اپیل کی وقفہ سوال میں اس معاملے کے سلسلے میں ہنگامہ کرنےو الے اپوزیشن کے لیڈروں کو لوک سبھا اسپیکر اوم برلا نے وقفہ صفر میں اپنی بات رکھنے کا موقع دیا کانگریس کے لیڈر ادھیر رنجن چودھری نے کہا کہ پانچ اگست کو وزیر داخلہ امت شاہ نے بتایا تھا کہ ریاست کے سابق وزیراعلی اور سابق مرکزی وزیر فاروق عبداللہ حراست میں نہیں ہیں ،ان کی صحت خراب ہے۔

...مزید دیکھیں
جے این یو معاملے کی  لوک سبھا میں گونج

جے این یو معاملے کی لوک سبھا میں گونج

نئی دہلی ، 18 نومبر (یو این آئی) جواہر لال نہرو یونیورسٹی (جے این یو) میں طلبا کو دستیاب سہولتوں کی فیسوں میں اضافے کے معاملہ کا آج لوک سبھا میں گونجا اور بڑھی ہوئی فیسوں کو واپس لینے کا مطالبہ کیا گیا بہوجن سماج پارٹی کے دانش علی نے یہ معاملہ ضابطہ 377 کے تحت اٹھایا اور کہا کہ حکومت نے طلباء کے ہاسٹل کی فیسوں ، ضمانت کی رقم ، کھانے پینے کی فیسوں وغیرہ میں اضافہ کرکے غریب ہونہار طلباء کے ساتھ ناانصافی کی ہے اور اس اقدام کو قابل مذمت قرار دیا ہے انہوں نے کہا کہ حکومت نے غریب گھروں سے آنے والے طلباء کو جے این یو میں تعلیم حاصل کرنا مشکل بنا دیا ہے۔

...مزید دیکھیں
تمام مسائل پر کھل کر بحث کے لئے تیار: مودی

تمام مسائل پر کھل کر بحث کے لئے تیار: مودی

نئی دہلی، 18 نومبر ( یواین آئی) وزیر اعظم نریندر مودی نے پیر کے روز کہا کہ پارلیمنٹ کے سرمائی سیشن میں حکومت تمام مسائل پر کھل کر بحث کے لئے تیار ہے اور امید ظاہر کی کہ یہ سیشن ملک کو ترقی کے راستے پر مزید آگے لے جائے گا  مسٹر مودی نے پارلیمنٹ سیشن شروع ہونے سے قبل یہاں پارلیمنٹ کے احاطے میں کہا ’’ہم تمام مسائل پر کھل کر بحث چاہتے ہیں  اچھی طرح سے بحث ہو یہ ضروری ہے  بحث اور بات چیت ہو ۔

...مزید دیکھیں
رام جنم بھومی پر عدالتی حکم نہ ماننے والے غدار : گری راج

رام جنم بھومی پر عدالتی حکم نہ ماننے والے غدار : گری راج

نئی دہلی ، 18 نومبر (یو این آئی) مویشی اور ماہی پروری کے مرکزی وزیر گری راج سنگھ نے اجودھیا میں رام جنم بھومی پر سپریم کورٹ کے حکم کی تعمیل نہ کرنے والوں کو غدار بتاتے ہوئے کہا کہ اگر انھیں ملک کے عدالتی نظام پر اعتماد نہیں ہے تو یہاں سے جانے کے دروازے کھلے ہیں مسٹر سنگھ نے کالکا مندر میں سناتن ہندو واہنی کے اجودھیا پر سپریم کورٹ کا فیصلہ آنے کے بعد اتوار کی شام منعقدہ ’شری رام مہوتسو اور کارکن کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہندوستانی جمہوریت کی ستم ظریفی یہ ہے کہ آج بھی ملک میں ایسے لوگ چھپے بیٹھے ہیں جنہیں سپریم کورٹ کا قبول نہیں ہے اور اس کی خلاف ورزی کرنے کا بھی کوئی موقع نہیں جانے دیتےایسے لوگوں کو ملک کی جمہوریت کے لئے بدنما داغ قرار دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اگر وہ عدالتی نظام پر یقین نہیں رکھتے ہیں تو دوسرے ممالک کے دروازے ان کے لئے کھلے ہیں۔

...مزید دیکھیں
پانی کے معیار پر سیاست نہ ہو:پاسوان

پانی کے معیار پر سیاست نہ ہو:پاسوان

نئی دہلی،18نومبر(یواین آئی)خوراک اور صارفین امور کے مرکزی وزیر رام ولاس پاسوان نے پیر کو لوک سبھا میں کہا کہ دہلی میں پینے کے پانی کے خراب معیار پر سبھی پارٹیوں کوایک ساتھ آنا چاہئے اور اس پر کوئی سیاست نہیں ہونی چاہئے دہلی میں پانی کے معیار پر بیورو آف انڈین اسٹینڈرڈس (بی آئی ایس)کی رپورٹ کو غلط بتانے پر مسٹر پاسوان نے کہا کہ اس پر سیاست نہیں ہونی چاہئے۔

...مزید دیکھیں
ملک کی تعلیمی ترقی میں آن لائن تعلیم کی الگ نوعیت کی ۱ہمیت :  پروفیسرسنتوش پانڈا

ملک کی تعلیمی ترقی میں آن لائن تعلیم کی الگ نوعیت کی ۱ہمیت : پروفیسرسنتوش پانڈا

نئی دہلی،18 نومبر(یو این آئی) حکومت ہند آن لائن تعلیم کی طرف توجہ دے رہی ہے اور یہ قدم قابل ستائش ہے حالانکہ اس کے لئے وسائل کی دستیابی اور بہت حد تک آن لائن سسٹم درست کرنے کی ضرورت ہے یہ بات اگنو کے اسٹرائیڈکے پروفیسر و سابق چیئرمین نیشنل کونسل فار ٹیچر ایجوکیشن (این سی ٹی ای)،پروفیسرسنتوش پانڈا نے کلیدی خطبہ میں کہی انہوں نے کہا کہ ملک کی تعلیمی ترقی میں آن لائن تعلیم کی الگ نوعیت کی ا ہمیت ہے۔

...مزید دیکھیں

گوتابايا نے سری لنکا کے صدارتی عہدے کا حلف لیا

18 Nov 2019 | 7:39 PM

کولمبو، 18 نومبر (یو این آئی) سری لنکا پوڈوجنا پیرمونا (ایس ایل پي پي) پارٹی کے گوتابايا راج پکشے نے ملک کے ساتویں صدر کے طور پر پیر کو حلف لیا اور کہا کہ ملک کی قومی سلامتی کو اولین ترجیح دی جائے گی۔

آلودگی روکنے میں ناکام رہے تو افسر اپنی جیب سے جرمانہ ادا کریں گے

18 Nov 2019 | 7:39 PM

نئی دہلی، 18 نومبر (یو این آئی)دہلی اور قومی راجدھانی علاقے کی خراب کوالیٹی سے نمٹنے کے لئے حکومت آلودگی پر قابوپانے پر ناکام رہنے والے افسران پر نجی طور سے جرمانہ عائد کرنے اور عدالتی کارروائی کرنے اور اگلے سال اگست تک سبھی سڑکوں سے دھول ختم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

image