image
Thursday, Jun 27 2019 | Time 18:39 Hrs(IST)
  • بترا بنے بین الاقوامی اولمپک کمیٹی کے رکن
  • سچن، لارا كو پیچھے چھوڑ کر وراٹ بنے سب سے تیز 20 ہزاری
  • تیسری بار باپ بننے والے ہیں وارنر
  • ٹیم کی بہترین کارکردگی سے ملی جیت: سرفراز
  • برازیل کے لئے کوارٹر فائنل سے باہر فرنانڈنہو
  • ۔۔۔۔
  • سری لنکا پر سیمی فائنل کی امیدیں برقرار رکھنے کا چیلنج
  • پوری دنیا کی نگاہیں ہندوستان کی طرف ہیں: مودی
  • سنت کبیر نگر: رشوت لیتے ہوئے داروغہ گرفتار
  • منموہن سنگھ سے سیتارمن نے ملاقات کی
  • ایئر انڈیا کو 7635 کروڑ روپیے کا نقصان
  • بلند شہر: قتل کے تین ملزم پولیس کی گرفت میں
  • ایئر انڈیا کو 7635 کروڑ روپیے کا نقصان
Entertainment » Bollywood

فاروق شیخ : متوازی فلموں کے ساتھ ساتھ کمرشیل فلموں میں مخصوص شناخت بنائی

فاروق شیخ : متوازی فلموں کے ساتھ ساتھ کمرشیل فلموں میں مخصوص شناخت بنائی

(25مارچ یوم پیدائش کے موقع پر خصوصی پیش کش)
نئی دہلی ، 24 مارچ (یواین آئی) بالی ووڈ میں فاروق شیخ ایک ایسےاداکارکےطور پر یاد کئے جاتے ہیں جنہوں نے ڈراموں اور متوازی سنیما کے ساتھ ساتھ پیشہ ورانہ سنیما میں بھی ناظرین کے درمیان اپنی مخصوص شناخت بنائی۔

فاروق شیخ کی پیدائش 25 مارچ 1948 کوگجرات کے شہر بدولی کے قریب ایک گاؤں نشوالی، امراہلی ضلع بڑودا میں ہوئی تھی۔
ان کے والد مصطفی شیخ ممبئی کے معروف وکیل تھے۔
فاررق شیخ پانچ بہن بھائیوں میں سب سے بڑے تھے۔

انہوں نے سینٹ میری اسکول، ممبئی سے تعلیم حاصل کرنے کے بعد سینٹ جیویر کالج، ممبئی اور پھر قانون کی سند سدھارتھ کالج سے حاصل کی۔
وہ کچھ دن اپنے والد کے ساتھ وکالت کرتے رہے۔
مگر وہ وکالت کے میدان میں کامیاب نہ ہوسکے ۔
فاروق شیخ نے قانون کے پیشے میں ناکام رہنے کے بعد تھیٹر کا رخ کیااور پونے فلم انسٹی ٹیوٹ میں داخلہ لے لیا۔
کالج کے دنوں میں وہ اداکاری اور اسٹیج ڈراموں میں حصہ لیتے تھے اور یہی پر ان کی ملاقات ان کی مستقبل کی شریک حیات روپا سے ہوئی۔
ان کی دو بیٹیاں ثناء شیخ اور شائستہ شیخ ہیں۔

وہ بہت شستہ اردو میں گفتگو کیا کرتے تھےاور ان کا طرز تحریربھی بہت خوب صورت تھا۔
کئی فلمی مکالمہ نگار، اپنی اسکرپٹ میں زبان و بیان کی اصلاح فاروق شیخ سے کرایا کرتے تھے۔
کلاسیکی اردو شاعری میں ان کا ذوق بہت اعلی تھا۔
اکثر ولی دکنی، غالب، میر، مومن، فیض، مخدوم محی الدین اور مجاز کے شعر گنگناتے تھے۔

70 کی دہائی میں بطور اداکار فلم انڈسٹری میں اپنی شناخت بنانے کے لئے فاروق شیخ ممبئی آئے۔
وہ یہاں تقریبا چھ سال تک جدوجہد کرتے رہے۔
انہیں یقین دہانی تو سبھی کراتے رہے ، لیکن کام کرنے کا موقع کوئی نہیں دیتا تھا۔
پھر فاروق شیخ کو 1973ء میں ہندوستان کی آزادی پر بننے والی فلم ’گرم ہوا‘ میں کام کرنے کا موقع ملا اور یہیں سے ان کے فلمی کیریئر کا آغاز ہوا۔
اس فلم میں کام کرنے کا معاوضہ انہیں 750 روپے ملا تھا۔
يوں تو پوری فلم اداکار بلراج ساہنی پر مبنی تھی لیکن اس فلم سے فاروق شیخ ناظرین کے درمیان کچھ حد تک اپنی پہچان بنانے میں کامیاب رہے۔

جاری۔
یو این آئی۔
شا پ

اداکاراؤں

اداکاراؤں کو مختلف شناخت دلائی کرشمہ نے

(سالگرہ 25 جون کے موقع پر)
ممبئی 24 جون ( یو این آئی) بالی ووڈ میں کرشمہ کپور کا ایک ایسی اداکارہ کے طور پر شمار کیا جاتا ہے جنہوں نے اداکاراؤں کو فلموں میں روایتی طور پر پیش کئے جانے کے طریقوں کو تبدیل کرنے کی طرف اپنی اداکاری سے ناظرین کے درمیان اپنی خاص شناخت بنائی۔

امریش

امریش پوری نے منفی کردار کو منفرد انداز میں پیش کیا

22جون کو یوم پیدائش کے موقع پر
ممبئی، 22 جون (یو این آئی) بالی ووڈ میں امریشی پوری کوایک ایسے اداکار کے طورپر یاد کیا جاتا ہے جنہوں نے اپنی دمدار آوازاور زبردست اداکاری کی بدولت منفی کردار کو ایک نئی شکل دی۔

کثیر

کثیر الجہت شخصیت کےمالک تھے ٹام آلٹر

(22 جون یوم پیدائش کے موقع پر)
ممبئی، 21 جون (یو این آئی) ٹام آلٹر کو بھلے ہی کوئی ان کے نام سے نہ جانتا ہوں لیکن بالی ووڈ مداحوں کے ذہن میں ٹام آلٹر کی پہنچان ایسے اداکار کے طور پر کی جاتی ہے جوبالی ووڈ فلموں میں زیادہ تر انگریز کا کردار ادا کرتا تھا۔

سانوریا

سانوریا گرل سونم کپور 34 برس کی ہوئیں

ممبئی 09 جون (یو این آئی ) بالی وڈ کی ' سانوریا' گرل اور انل کپور کی بیٹی سونم کپور آج 34 سال کی ہو گئیں۔

سلمان،

سلمان، اجے کو اپنے خاندان کی طرح مانتی ہوں : تبو

ممبئی،15 مئی (یواین آئی) بالی وڈ اداکارہ تبو سلمان خان اور اجے دیوگن کو اپنے خاندان کی طرح مانتی ہیں۔

زی

زی ٹی وی پر انگوری بھابھی اور گڈن کے ذریعہ کرکرے نے نئی سوچ کا جشن منایا

نئی دہلی، 15مئی(یو این آئی)رواں ماہ مئی میں کئی کردار جن میں گڈن تم سے نہ ہوپائے گا-کہ گڈن، بھابھی جی گھر پر ہیں کہ انگوری اور ہپو کی الٹن پلٹن کے راجیش اور کچھ دیگر کردار انتہائی دلچسپ کردار میں نظر آئیں گے جہاں وہ اپنے کنبوں کو دلچسپ انداز میں جدید سوچ کی طرف مائل کریں گے۔

ہندی

ہندی فلموں میں سرکٹ کے نام سے مشہور ہیں ارشد وارثی

ممبئی ، 18 اپریل (یو این آئی) ارشد وارثی کی پیدائش ایک مسلم گھرانے میں 19 اپریل 1968 کو ممبئی میں ہوئی۔

گلشن

گلشن باورا: فلمی نغمہ نگاری کو نئی جہتوں سے نوازا

12 اپریل سالگرہ کے موقع پر جاری ....
ممبئی، 11 اپریل (یو این آئی) بالی وڈ میں گلشن باورا کو ایک ایسے نغمہ نگار کے طورپر یاد کیا جاتا ہے جنہوں نے اپنے جذباتی نغمات سے تقریباً تین دہائیوں تک ناظرین کو اپنا دیوانہ بنایا ۔

سچترا

سچترا سین نے بین الاقوامی سطح پر اپنی شناخت بنائی

چھ اپریل یوم ولادت کے موقع پر خصوصی پیشکش
ممبئی،5اپریل(یواین آئی)ہندوستانی سنیما میں سچترا سین کو ایک ایسی اداکارہ کے طور پر یاد کیا جاتا ہے جنہوں نے بنگلہ فلموں میں قابل تعریف اداکاری کے ساتھ ساتھ بین الاقوامی سطح پر بھی اپنی خاص شناخت قائم کی۔

این

این چندرا: سماجی پس منظر پر مبنی فلمیں بناکر ناظرین کے دلوںمیں خاص شناخت بنائی

(4 اپریل سالگرہ کے موقع پر)
ممبئی، 3 اپریل (یو این آئی) بالی ووڈ میں این چندرا کو ایک ایسے فلم ساز کے طور پر شمار کیا جاتا ہے جنہوں نے سماجی پس منظر پر مبنی فلمیں بنا کر شائقین کے درمیان اپنی خاص شناخت بنائی ہے۔

کامیڈی کنگ  کہے جانے والے محمود کو بھی کرنی پڑی جدوجہد

کامیڈی کنگ کہے جانے والے محمود کو بھی کرنی پڑی جدوجہد

ممبئی، 28 ستمبر (یو این آئی) اپنے مخصوص انداز، اسٹائل اورمزاحیہ آواز سے تقریباً پانچ دہائیوں تک ہنسانے اور گدگدانے والےمحمود نے فلم انڈسٹری میں کنگ آف کامیڈی کا درجہ حاصل کیا لیکن انہیں اس کے لئے کافی مشقت کرنا پڑی اوریہاں تک سننا پڑا کہ نہ تو وہ اداکاری کرسکتے ہیں اور نہ ہی کبھی اداکار بن سکتے ہیں۔

بھارت رتن شہنائی نواز استاد بسم اللہ خان

بھارت رتن شہنائی نواز استاد بسم اللہ خان

نئی دہلی، 20 اگست (یو این آئی) دُنیا بھر میں شہنائی کو شناخت دلانےاور اسے خاص و عام میں مقبول بنانے والے معروف شہنائی نواز استاد بسم اللہ خان کی پیدائش21 مارچ 1916 کو بہار کے گاؤں (دمراؤں) ضلع بکسر کے پیغمبربخش اور والدہ مٹھاں کے گھر ہوئی تھی۔ بسم اللہ خان کے آباؤ اجداد بھوج پور ضلع بہار کے شاہی دربار میں نقار خانہ میں ملازم بھی تھے۔ان کے والد پیغمبر بخش خان مہاراجہ جودھ پور کے دربار میں شہنائی نواز تھے۔اس سے پہلے ان کےپردادا استاد سالار حسین خان اور دادا رسول بخش خان بھی دمراؤں کے شاہی دربار میں گاتےتھے۔ ماں باپ نے اُن کانام امیرالدین خان رکھا تھا لیکن دادا نے امیرخان کو بسم اللہ میں بدل دیا اور ہاتھ میں شہنائی تھما دی۔ چونکہ موسیقی انہیں میراث میں ملی تھی اسی لیے بچپن سے ہی موسیقی میں دلچسپی رکھنے والے بسم اللہ خان نے اپنے ماموں علی بحش سےشہنائی نوازی کی تعلیم حاصل کی اور پھر بعد میں بسم اللہ خان انہی کے ساتھ کاشی کے وشوناتھ مندر میں شہنائی بجانےلگے۔چار یا پانچ برس کی عمر میں بنارس آ گئے تھے۔

زی ٹی وی پر انگوری بھابھی اور گڈن کے ذریعہ کرکرے نے نئی سوچ کا جشن منایا

زی ٹی وی پر انگوری بھابھی اور گڈن کے ذریعہ کرکرے نے نئی سوچ کا جشن منایا

نئی دہلی، 15مئی(یو این آئی)رواں ماہ مئی میں کئی کردار جن میں گڈن تم سے نہ ہوپائے گا-کہ گڈن، بھابھی جی گھر پر ہیں کہ انگوری اور ہپو کی الٹن پلٹن کے راجیش اور کچھ دیگر کردار انتہائی دلچسپ کردار میں نظر آئیں گے جہاں وہ اپنے کنبوں کو دلچسپ انداز میں جدید سوچ کی طرف مائل کریں گے۔

image