image
Friday, Feb 23 2024 | Time 02:21 Hrs(IST)
National

شعبہ اردو، جامعہ ملیہ اسلامیہ کی پچاسویں سال گرہ فروغ اردو کے بڑے وژن کا پیش خیمہ: سید شاہد مہدی

شعبہ اردو، جامعہ ملیہ اسلامیہ کی پچاسویں سال گرہ فروغ اردو کے بڑے وژن کا پیش خیمہ: سید شاہد مہدی

نئی دہلی، 25 نومبر (یو این آئی)فروغ اردو میں جامعہ ملیہ اسلامیہ کی خدمات غیر معمولی ہیں بالخصوص ترجمہ اور ادب اطفال میں معماران جامعہ کے کارناموں کو فراموش نہیں کیا جاسکتا ان خیالات کا اظہار جامعہ ملیہ اسلامیہ کے سابق وائس چانسلر سید شاہد مہدی نے شعبہ اردو کے پچاس سال مکمل ہونے پرافتتاحی تقریب کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔
انہوں نے کہا کہ توجہ طلب امر یہ ہے کہ یہ سبھی لوگ یورپ کی عظیم دانش گاہوں کے فیض یافتہ تھے اور اردو سے بطور سبجکٹ ان کا براہ راست تعلق نہیں تھا۔ انھوں نے شعبہ اردو کو مبارک دیتے ہوئے کہا کہ نصف صدی کے سفر کی اس تکمیل پر فروغ اردو کے لیے ایک بڑا وژن ہی شعبے کی تاریخ کو بامعنی بنا سکتا ہے۔
مہمان خصوصی معروف ادیب و دانشور پروفیسر صدیق الرحمن قدوائی نے کہا کہ یہ میرے لیے نہایت جذباتی لمحہ ہے۔ چوں کہ اس موقعے پر میں خود کو سات دہائی پیچھے مڑ کر دیکھتا ہوں اور بجا طور پر ناسٹلجیا کا شکار ہوجاتا ہوں۔ جامعہ کا سفر ایک معنی میں اردو کا سفر بھی ہے۔ یہاں کے معماران نے اردو زبان و تہذیب کو اپنے اندر رچا بسا لیا تھا۔ یہ موقع شعبہئ اردو کے لیے یادگار ہے اور میں خو د کو اسی شعبے کا حصہ سمجھتا ہوں۔
مہمان اعزازی قومی کونسل برائے فروغ اردو زبان کے ڈائرکٹر پروفیسر شیخ عقیل احمد نے پرجوش تہنیت پیش کرتے ہوئے کہا کہ اس وقت جامعہ کا شعبہئ اردوہندوستان کے تمام اردو شعبوں میں سب سے نمایاں ہے۔انھوں نے وائس چانسلر پروفیسر نجمہ اختر کے بڑے وژن کی پذیرائی کرتے ہوئے کہا کہ ان کی غیر معمولی قیادت کے نتیجے میں آج جامعہ ملیہ اسلامیہ کو ایک اعلیٰ سطح کی یونیورسٹی کا درجہ حاصل ہے۔ انھوں نے کونسل کی جانب سے شعبہئ اردو کے بھرپورتعاون کی یقین دہانی کی۔
مہمان اعزازی ڈین فیکلٹی برائے انسانی علوم و السنہ پروفیسر محمد اسدالدین نے کہا کہ مجھے اس شعبے سے ذاتی طور پر غیر معمولی فیض حاصل ہوا ہے۔ خصوصاً پروفیسر گوپی چند نارنگ، پروفیسر شمس الرحمن فاروقی، پروفیسر شمیم حنفی، قرۃ العین حیدراور انتظار حسین کی وابستگی اس شعبے کے لیے سرمایہئ افتخار ہے۔ افتتاحی تقریب میں خصوصی مقرر اور اردو فارسی کے ممتاز عالم پروفیسر شریف حسین قاسمی نے کہا کہ شعبہئ اردو، جامعہ ملیہ اسلامیہ کا علمی مقام و مرتبہ مسلم ہے۔ انھوں نے اردو فارسی کے تہذیبی رشتے پر وقیع خطبہ پیش کرتے ہوئے کہا کہ اردو اور فارسی کے درمیان لسانی اور تہذیبی رشتوں کی جڑیں نہایت گہری اور مستحکم ہیں۔ اردو زبان کے ذریعے جو زندگی کے ہمہ گیر مظاہر ظہور پذیر ہوئے اس میں فارسی زبان و ادب کا کردار بے حد اہم اور موثر رہا ہے۔
صدر شعبہ پروفیسر احمد محفوظ نے مہمانان کا استقبال کرتے ہوئے کہا کہ شعبہئ اردو، جامعہ ملیہ اسلامیہ کا علمی اورادبی ورثہ نہایت وقیع اور ثروت مند ہے۔ انھوں نے شعبے کی تاریخ پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ اس شعبے کا قیام پروفیسر محمد مجیب کے دور میں 25/نومبر1972 کو عمل میں آیا اور سب سے پہلے صدر شعبہ پروفیسر تنویر احمد علوی مقرر کیے گئے۔ ان کے گراں قدر علمی مقام و منزلت سے سبھی واقف ہیں اور اس کے بعد سے لے کر آج تک نہایت ممتاز شخصیات اس شعبے سے منسلک رہی ہیں۔
اس یادگارموقعے پر شعبے کے سبکدوش اساتذہ پروفیسر قاضی عبیدالرحمن ہاشمی، پروفیسر شمس الحق عثمانی، پروفیسر خالد محمود، پروفیسر شہناز انجم، پروفیسر وہاج الدین علوی، پروفیسر عبدالرشید، پروفیسر شہپر رسول اور ڈاکٹر سہیل احمدفاروقی کی خدمت میں گلدستہ، شال اور ایک مومنٹو پیش کیا گیا۔ تقریب میں پروفیسر شہزاد انجم، پروفیسر خالد جاوید، پروفیسر سرورالہدیٰ اور ڈاکٹر سید تنویر حسین نے گلدستے سے مہمانان کا خیر مقدم کیا۔ اجلاس کی نظامت ڈاکٹر محمد مقیم نے کی۔ پروگرام کا آغاز ڈاکٹر شاہ نواز فیاض کی تلاوت اور اختتام تقریبات کے کنوینر پروفیسر ندیم احمد کے اظہار تشکر پر ہوا۔ اس موقعے پر پروفیسر ابن کنول، پروفیسر تسنیم فاطمہ، ڈاکٹر محمد ادریس، ڈاکٹر عمیر منظر، پروفیسر عمران احمد عندلیب، ڈاکٹر شاہ عالم، ڈاکٹر خالد مبشر اور ڈاکٹر مشیر احمدکے علاوہ شعبے کے اساتذہ، ریسرچ اسکالر اور طلبا و طالبات موجود تھے۔
یو این آئی۔ ع ا۔

خاص خبریں
وزیراعظم نے نوساری میں 47,000 کروڑ روپے کے کئی ترقیاتی پروجیکٹوں کو قوم کے نام وقف کیا

وزیراعظم نے نوساری میں 47,000 کروڑ روپے کے کئی ترقیاتی پروجیکٹوں کو قوم کے نام وقف کیا

نوساری، 22 فروری (یو این آئی) وزیر اعظم نریندر مودی نے جمعرات کو گجرات کے نوساری میں 47,000 کروڑ روپے سے زیادہ کی لاگت والے کئی ترقیاتی پروجیکٹوں کو قوم کے نام وقف کیا اور سنگ بنیاد رکھا۔

...مزید دیکھیں
کسان ہمارے ان داتا، حکومت ان سے مسائل پر بات کرنے کے لیے ہمیشہ تیار ہے: ٹھاکر

کسان ہمارے ان داتا، حکومت ان سے مسائل پر بات کرنے کے لیے ہمیشہ تیار ہے: ٹھاکر

نئی دہلی، 22 فروری (یو این آئی) کسانوں کو 'انا داتا' اور 'بھائی' کہتے ہوئے مرکزی حکومت نے جمعرات کو کہا کہ وہ ان کسانوں سے بات کرنے کے لیے تیار ہے جو فصلوں کی کم از کم امدادی قیمت (ایم ایس پی) کو لے کر احتجاج کر رہے ہیں۔

...مزید دیکھیں
گجرات سے شروع ہونے  والا امول دودھ فیڈریشن برگد کا درخت بن کر پوری دنیا میں پھیل گیا ہے :مودی

گجرات سے شروع ہونے والا امول دودھ فیڈریشن برگد کا درخت بن کر پوری دنیا میں پھیل گیا ہے :مودی

احمدآباد، 22 فروری (یو این آئی) وزیراعظم نریندر مودی نے کوآپریٹیو دودھ ماکیٹنگ فیڈریشن کی گولڈن جوبلی کے موقع پر ایک عوامی جلسے کو خطاب کرتے ہوئے آج کہا کہ گجرات کے دیہاتوں نے 50 سال پہلے جو پودا لگایا تھا وہ آج برگد کا ایک بڑا درخت بن چکا ہے اور آج برگد کے اس بڑے درخت کی شاخیں ملک و بیرون ملک پھیل چکی ہیں۔

...مزید دیکھیں
کسانوں اور فوجیوں کو نظر انداز کرکے حکومت جمہوریت کا قتل کر رہی ہے: راہل گاندھی

کسانوں اور فوجیوں کو نظر انداز کرکے حکومت جمہوریت کا قتل کر رہی ہے: راہل گاندھی

نئی دہلی، 22 فروری (یواین آئی) کانگریس لیڈر راہل گاندھی نے مرکزی حکومت پر کسانوں اور فوجیوں کو نظر انداز کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ مودی حکومت میں لوگوں کی بات نہیں سنی جارہی ہے اور عوام کی آواز کو دبا کر جمہوریت کا قتل کیا جارہا ہے۔

...مزید دیکھیں
دہلی حکومت سڑکوں کو بہتر بنانے کے لیے 'مشن موڈ' میں کام کر رہی ہے: آتشی

دہلی حکومت سڑکوں کو بہتر بنانے کے لیے 'مشن موڈ' میں کام کر رہی ہے: آتشی

نئی دہلی، 22 فروری (یو این آئی) دہلی کے تعمیرات عامہ کے وزیر آتشی نے جمعرات کو کہا کہ کیجریوال حکومت یہاں کی سڑکوں کو مسافروں کے لیے بہتر، خوبصورت اور محفوظ بنانے کے لیے مشن موڈ میں کام کر رہی ہے۔

...مزید دیکھیں
پبلک اکاؤنٹس کمیٹی نے سترہویں لوک سبھا کے دوران 138 رپورٹیں پیش کیں

پبلک اکاؤنٹس کمیٹی نے سترہویں لوک سبھا کے دوران 138 رپورٹیں پیش کیں

نئی دہلی، 22 فروری (یواین آئی) سترہویں لوک سبھا کے دوران پبلک اکاؤنٹس کمیٹی (پی اے سی) نے 138 معاملے کی چھان بین کی اور اتنی ہی رپورٹیں پیش کیں۔

...مزید دیکھیں
مولانا آزاد نے اردو صحافت کو زمانے کی رفتار سے آنکھیں چار کرنے کا سلیقہ سکھایا:معصوم مرادآبادی

مولانا آزاد نے اردو صحافت کو زمانے کی رفتار سے آنکھیں چار کرنے کا سلیقہ سکھایا:معصوم مرادآبادی

مانو لکھنؤکیمپس میں مولانا آزاد کی صحافتی خدمات کے موضو ع پر توسیعی خطبہ کا انعقاد
لکھنؤ،22 فروری (یو این آئی) مولانا آزاد نے اردوصحافت کو اس معراج پر پہنچایا کہ وہ دیگر ترقی یافتہ زبانوں کی صحافت کے ہم پلہ قرارپائی۔

...مزید دیکھیں
image