image
Tuesday, Oct 20 2020 | Time 05:18 Hrs(IST)
National

اگر حکومت اتفاق رائے سے کام کرتی تو کووڈ-19 کے ایسے بدتر حالات کا سامنا نہیں ہوتا: اپوزیشن

اگر حکومت اتفاق رائے سے کام کرتی تو کووڈ-19 کے ایسے بدتر حالات کا سامنا نہیں ہوتا: اپوزیشن

نئی دہلی، 20 ستمبر (یو این آئی) حزب اختلاف نے آج الزام لگایا کہ عالمی وبا 'کووڈ-19' سے نمٹنے کے لئے حکومت کی مشینری پوری طرح ناکام رہی ہے اگر حکومت یکطرفہ فیصلہ کرنے کے بجائے سیاسی اتفاق رائے سے اس بحران کا سامنا کرتی تو صورتحال اس قدر خراب نہیں ہوتی کانگریس کے ششی تھرور نے لوک سبھا میں ضابطہ 193 کے تحت کووڈ 19 کی صورتحال پر بحث کا آغاز کرتے ہوئے کہا کہ "صرف ایک ہی چیز یہ صورتحال سازگار ہوپائی ہے۔ حکومت کو اس بیماری کی وجہ سے اپنا چہرہ چھپانے کا بہانہ مل گیا ہے"۔ انہوں نے کہا کہ آج ہندوستان ایک ایسا ملک بن گیا ہے جہاں دنیا میں سب سے زیادہ متاثرین اور اموات کی سب سے زیادہ تعداد ہے۔ یہ صورتحال انتہائی غیر معمولی ہے۔ اس سے معاشرے کے ہر طبقہ کے لوگ متاثر ہوئے ہيں۔ سرکاری مشینری مکمل طور پر ناکام ہوچکی ہے۔ ہم دراصل تیار نہیں ہیں۔ ایک اندھیرا ہے۔ اس اندھیرے سے کیسے نکلا جائے۔
مسٹر تھرور نے کہا کہ جنوری میں ہی ووہان میں وبائی وائرس کے اشارے آچکے تھے۔ عالمی ادارہ صحت نے اسے مارچ میں عالمی وبا قرار دیا تھا۔ کانگریس لیڈر راہل گاندھی فروری سے متنبہ کر رہے تھے۔ لیکن حکومت نے اس پر توجہ نہیں دی۔ وزیر اعظم نے صرف ساڑھے تین گھنٹے کی مہلت دے کر پورے ملک میں مکمل لاک ڈاؤن نافذ کردیا۔ حکومت نے ایک سنگین غلطی کردی۔ اچانک گروسری کی دکانوں پر ہجوم تھا۔ راتوں رات مہاجر مزدور پیدل سفر کرتے ہوئے آبائی شہر روانہ ہونے لگے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کی کوئی تیاری نہیں تھی۔ اگر حکومت تمام جماعتوں کے ساتھ مل جل کر اس آفت کا مقابلہ کرتی تو صورتحال بہت بہتر ہوتی۔
انہوں نے کہا کہ غیر منظم شعبے کے لاکھوں افراد کو ہزاروں کلو میٹر پیدل سفر کرنا پڑا۔ ہم ان لوگوں کی بھوک مٹانے اور وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے میں ناکام رہے۔ اگر ان مہاجر مزدوروں کو پہلے ہی اپنے گھروں تک پہنچنے کا موقع فراہم کیا جاتا، تو کورونا وائرس پر قابو پاسکتے اور مزدوروں کو پریشانی بھی نہیں ہوتی۔ انہوں نے کہا کہ کووڈ-19 کی وجہ سے ملک میں دو کروڑ 10 لاکھ ملازمتیں ختم گئیں۔ 80 فیصد مزدورون کی تنخواہوں میں کمی کی گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کووڈ-19 سے ملک میں تین نقصانات ہوئے ہیں۔ بے روزگاری میں اضافہ ہوا، مائکرو، چھوٹی اور درمیانے درجے کی صنعتوں اور کاروباری اداروں کو نقصان ہوا اور کووڈ کے معاملے اب بھی تیزی سے بڑھ رہے ہيں۔ حکومت کو 16 مشورے دیئے گئے لیکن قبول نہیں کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ حکومت غریبوں اور کسانوں کو ٹی وی دکھا کر گمراہ نہیں کرسکے گی۔
جاری۔ یو این آئی۔ م ش۔ ایف اے۔ 1945

خاص خبریں
نئی تعلیمی پالیسی نرسری سے لے کر پی ایچ ڈی تک کے تعلیمی شعبے میں بنیادی تبدیلیاں لائے گی: مودی

نئی تعلیمی پالیسی نرسری سے لے کر پی ایچ ڈی تک کے تعلیمی شعبے میں بنیادی تبدیلیاں لائے گی: مودی

نئی دہلی، 19 اکتوبر (یواین آئی) وزیر اعظم نریندر مودی نے آج کہا ہے کہ نئی قومی تعلیمی پالیسی ابتدائی تعلیم سے لے کر اعلی تعلیم تک بنیادی تبدیلیاں لائے گی تاکہ 21 ویں صدی کی ضروریات کو پورا کیا جاسکے مسٹر مودی نے ویڈیو کانفرنس کے ذریعہ میسور یونیورسٹی کے صد سالہ کنووکیشن سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ " نیشنل ایجوکیشن پالیسی پری نرسری سے لے کر پی ایچ ڈی تک ملک کی پوری تعلیمی شعبہ میں بنیادی تبدیلی لانے کے لئے ایک بہت بڑی مہم ہے۔

...مزید دیکھیں
ملک میں کورونا متاثرین 75.50لاکھ اور ہلاک شدگان کی تعداد 1.14لاکھ سے متجاوز

ملک میں کورونا متاثرین 75.50لاکھ اور ہلاک شدگان کی تعداد 1.14لاکھ سے متجاوز

نئی دہلی، 19 اکتوبر ( یواین آئی) ملک میں کورونا وائرس مریضوں کی تعداد میں لگاتار اضافہ کے ساتھ 75.50 لاکھ ، جبکہ فعال کیسزکی تعداد کم ہوکر 7.72 لاکھ رہ گئی ہے مرکزی وزارت صحت و خاندانی بہبود کی جانب سے پیر کے روز جاری تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق ملک میں گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 55،722 نئے کیسز رپورٹ ہوئے جس سے یہ تعداد بڑھ کر 75،50،273 ہوگئی۔

...مزید دیکھیں
دہلی میں کورونا سے صحت یاب ہونے والوں کی شرح میں پھر سے بہتری

دہلی میں کورونا سے صحت یاب ہونے والوں کی شرح میں پھر سے بہتری

نئی دہلی ،19اکتوبر(یواین آئی)راجدھانی میں پیر کو کورونا وائرس سے انفکشن کے 2154نئے معاملے سامنے آنے سے متاثرین کی کل تعداد 3لاکھ 33ہزار کے پار پہنچ گئی لیکن راحت کی بات یہ ہے کہ اس دوران مریضوں کے شفایاب ہونے کی شرح میں اضافہ درج کیاگیاہے جس سے زیرعلاج مریضوں کی تعدادمیں کمی آئی ہے ۔

...مزید دیکھیں
نئی تعلیمی پالیسی سے ویویکانند کا خواب شرمندہ تعبیرہوگا : نشنک

نئی تعلیمی پالیسی سے ویویکانند کا خواب شرمندہ تعبیرہوگا : نشنک

نئی دہلی، 19 اکتوبر (بات) مرکزی وزیرتعلیم ڈاکٹر رمیش پوکھریال نشنک نے کہا کہ مشرق اور مغرب کے بہترین عناصر کو ہندوستانی روحانی علم کے ساتھ مربوط کر کے باطن کی کھوج ، مرکوزیت ، مراقبہ کے کلچر کے ساتھ مغربی سائنس اور ٹکنالوجی میں ہم آہنگی شامل کرنے کا سوامی ویویکانند کا خواب نئی تعلیمی پالیسی سے شرمندہ تعبیر ہوگا۔

...مزید دیکھیں
فوج نےمشرقی لداخ کے ڈیمچوک سیکٹر میں چینی فوجی کو پکڑا

فوج نےمشرقی لداخ کے ڈیمچوک سیکٹر میں چینی فوجی کو پکڑا

نئی دہلی، 19 اکتوبر (یواین آئی) فوج نے مشرقی لداخ کے ڈیمچوک سیکٹر میں آج چین کے ایک فوجی کو پکڑ لیا جو لائن آف ایکچول کنٹرول کو عبور کرکےآج ہندوستانی حدود میں داخل ہوا تھا  فوج نے آج ایک بیان جاری کر کے کہا کہ چین کی فوج کا کارپورل وانگ یا لانگ آج لائن آف ایکچول کنٹرول کو عبور کرکے مشرقی لداخ کے ڈیموکک سیکٹر میں آگیا جسے پکڑ لیا گیا۔

...مزید دیکھیں
کورونا وائرس کے اثرات پر 2021  کا حج منحصر

کورونا وائرس کے اثرات پر 2021 کا حج منحصر

نئی دہلی ، 19 اکتوبر (یواین آئی)اقلیتی امور کے مرکزی وزیر مختار عباس نقوی نے کہا کہ حج 2021 کورونا کی وبا کے پیش نظر قومی - بین الاقوامی پروٹوکول کے رہنما ہدایات پر منحصر ہوگا پیر کو یہاں حج 2021 کے سلسلہ میں جائزہ میٹنگ کی صدارت کرتے ہوئے نقوی نے کہا کہ حج- 2021 جون جولائی کے مہینے میں ہونا ہے لیکن کوروناوائرس اور اس کے اثرات اور سعودی عرب اور حکومت ہند کے عوام کی صحت کا مکمل جائزہ لینے اور رہنما ہدایات کی بنیاد پر حج 2021 کا حتمی فیصلہ لیا جائے گا۔

...مزید دیکھیں
پٹرول اور ڈیزل کی قیمتیں لگاتار 17 ویں دن مستحکم

پٹرول اور ڈیزل کی قیمتیں لگاتار 17 ویں دن مستحکم

نئی دہلی ، 19 اکتوبر ( یواین آئی) پیر کو مسلسل 17 ویں روز پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں کوئی اضافہ نہیں ہوا ڈیزل کی قیمت میں آخری بار 2 اکتوبر کو تخفیف کی گئی تھی جبکہ پٹرول کی قیمت گذشتہ 27 روز سے مستحکم ہے پٹرول کی قیمتوں میں آخری بار 22 ستمبر کو 7 سے 8 پیسے فی لیٹر کم کی گئی تھی 
ملک کی سرخیل تیل کمپنی انڈین آئل(آئی او سی ایل) کے مطابق دہلی میں آج پٹرول 81.06 روپے جبکہ ڈیزل 70.46 روپے فی لیٹر پر مستحکم ہے۔

...مزید دیکھیں

براڈ اور ووکس نے ونڈیز کو 287 کے اسکور پر روکا

19 Jul 2020 | 11:45 PM

مانچسٹر، 19 جولائی (یو این آئي) انگلینڈ کے تیز بولروں اسٹوارٹ براڈ اور کریس ووکس نے عمدہ بولنگ کرتے ہوئے تین وکٹیں حاصل کیں اور اتوار کے روز دوسرے کرکٹ ٹیسٹ میچ کے چوتھے دن چائے کے وقفے کے بعد ویسٹ انڈیز کو پہلی اننگز میں 287 رنز پر بولڈآؤٹ کردیا۔

image